مسلم ایجو کیشن ٹرسٹ کی جانب سے تعلیم کو مستحکم بنانے کے تئیں لون اسکالر شپ کے لئے درخواستیں طلب۔ارشد جمال

تعلیم یافتہ بے روزگار نوجوانوں کو کیرئر کی جانب راہنمائی کے مقصد سے جاری پریس ریلیز
مسلم ایجو کیشن ٹرسٹ کی جانب سے تعلیم کو مستحکم بنانے کے تئیں لون اسکالر شپ کے لئے درخواستیں طلب۔ارشد جمال

مؤناتھ بھنجن۔سابق چیئر مین ارشد جمال نے آج ذرائع کے حوالے سے تعلیم یافتہ بے روزگار نوجوانوں کو کیرئر کی جانب راہنمائی کے مقصد سے ایک پریس نوٹ جاری کرتے ہوئے کہا ہے کہ دنیا بھر میں مسلمانوں کے سماجی اور اقتصادی حالات کو بہتر بنانے اور ان کی تعلیمی ترقی کے لئے معقول شراکت کو یقینی بنانے کے مقصد سے 1983 میں سعودی عرب کے اسلامی ترقیاتی بینک جدہ کے ذریعہ اپنا اسکالرشپ پروگرام شروع کیا گیاہے جہاں کے مسلم طلبہ مالی کمزوری کے سبب اعلی تعلیم کے حصول میں قاصر ہیں۔اس ضمن میں اسلامی ترقیاتی بینک جدہ کے ذریعہ مالی طور پر کمزور ان مسلم اسکالرس کوقرض حسن کے طور پر اسکالرشپ کا تحفہ دے کر ان کی تعلیم کو جاری رکھنے میں مدد کر رہا ہے۔اس پروگرام کے پیچھے مقصد یہ ہے کہ مالی طور پر کمزور ذہین اکیڈیمک طلباء کوتعلیم کے حصول کے مواقع فراہم کرائے جائیں جس سے منظور شدہ متعلقہ فیکلٹی میں پروفیشنل ڈگری کورسیز کی تکمیل کے لئے ان کے مطالعہ کا راستہ مزید ہموار ہو سکے تاکہ وہ کمیونٹی اور ملک کی ترقی میں معاون و مددگار بننے کے ساتھ ہی انہیں بزنیس میں بھی عبور حاصل ہو اور وہ اہل پروفیشنل بن سکیں۔انہوں نے بتایا کہ یہ اسکالرشپ طالب علموں کو پاک قرض (قرض حسن) ہے۔ہدایات میں وصول کنندگان سے گریجوئیشن کی تکمیل کے بعد یا پیشے میں آنے کے ایک سال کے پورا ہونے کے بعد اسکالرشپ کی واپسی کاذکر ہے نیزلئے گئے پورے قرض کی واپسی کے سلسلے میں گریجوئیشن کے بعد 5 سالوں کے اندر اندر مکمل طور پر ادا کرنے کی بات کہی گئی ہے۔انہوں نے اہلیت کا ذکر کرتے ہوئے بتایا کہ یہ اسکالرشپ ان طلبا کے لئے ہے جو ایس ایس سی(10+2)کا امتحان پاس کر چکے ہیں اور اس پروگرام کے تحت منظور کردہ مطالعہ کے شعبوں میں سے کسی ایک میں رواں سیشن میں انڈرگریجویٹ 4 سے 5 سال بیچلر ڈگری مطالعہ کو پورا کرنے کے خواہاں ہیں۔ ڈپلوما کے بعد ڈگری کورسیز میں شمولیت والے طالب علموں کو اسکالرشپ دینے پر غور نہیں کیا جاناہے۔اسی طرح اسکالرشپ کے لئے قابلیت کے بارے میں بتاتے ہوئے مسٹر جمال نے کہا کہ طالب علموں کے لئے ایس ایس سی(10+2) امتحان میں انگریزی، فزکس، کیمسٹری اور حیاتیات/ ریاضی میں کم از کم 70/ فیصدنمبرات کا حصول لازمی ہے۔اسی طرح لاء میں داخلے کے لئے درخواست دہندگان کو SSC (10+2) میں انگریزی اور اختیاری مضامین میں بھی کم از کم 65 /فیصد نمبرات کا حصول ضروری ہے۔انہوں نے بتایا کہ اس کے لئے عمر 24 سال سے زائد نہیں ہونی چاہیئے اور نہ ہی کسی دیگر اسکالر شپ کا فائدہ حاصل ہورہا ہو۔ یہ بھی قابل ذکر ہے کہ طلباء یا ان کے والدین مالی طور پر کمزور ہوں اوروہ تعلیم کے لئے اخراجات اٹھانے میں قاصر ہوں۔مسڑجمال نے بتایا کہ پروگرام کے تحت مطالعہ کے لئے منظور شدہ کورسیزمیں میڈیسن (سبھی برانچیز بشمول آیوروید،یونانی و ہومیو پیتھی)،ڈینٹسٹری، فارمیسی، ویٹر نیٹی سائنس، فیزیو تھیریپی، نرسنگ، بایوٹیکنالوجی و مائیکرو بایو لوجی، انجینئر نگ (سبھی برانچیز) ایگریکلچر، بیچلر آف بیوزینیسیس نیز بیچلر آف لا (بی اے + ایل ایل بی)  شامل ہیں۔
اس قرض حسن اسکالر شپ کے حصول کے لئے مسٹر جمال نے فارم بھرنے کی تفصیل بتاتے ہوئے کہا کہ اس اسکالر شپ کے لئے فارم جمع کرنے کی آخری تاریخ 16 /اگست 2017 متعین ہے۔ درخواست لازمی طور پر ٹائپ ہونی چاہیئے یا صاف حروف میں سیاہی سے لکھی ہونی چاہیئے۔ تمام معاون دستاویزات کے ساتھ دو سیٹس میں تیار کیا جانا ضروری ہے۔ تمام معلومات انگریزی میں فراہم کی جائیں گی۔جو دستاویز انگریزی میں نہیں ہوں انکا مصدقہ ترجمہ منسلک کریں۔تمام مطلوب معلومات فراہم کرائیں بصورت دیگر درخواست پر غور نہیں کیا جائے گا۔درخواست میں پہلے پیج پر صوبے کے کالم میں اپنے صوبے کا نام بھی لکھنا ضروری ہے۔
مسٹر جمال نے بتایا کہ ویب سائٹ پر دی گئی ہدایات کے مطابق فارم پر کرنے کے بعد اصل فارم جو باضابطہ طور پر مکمل کیا گیا ہو اور جس کے ساتھ  SSC (ClassX) اور SSC (10+2) کی مارکشیٹ و سرٹیفیکیٹس، تاریخ پیدائش (اگر درجہ 10میں درج نہ ہو)،داخلہ کی تاریخ کی تصدیق کے لئے ادارے کے ذریعہ فراہم کردہ فیس جمع کرنے کی رسید،والد/سرپرست کے انکم سرٹیفیکٹ وغیرہ کی مصدقہ فوٹو کاپیاں،دو پاسپورٹ سائز فوٹو جس کے پیچھے نام و صوبہ لکھا ہو اور ایک خود مصدقہ 9x4 انچ کا لفافہ جس پر 20 روپیہ کا پوسٹیج چپکا ہوا ہو کی ایک نقل کے ساتھThe Chairman Muslim Education Trust, E-3, Abul Fazl Enclave, Jamia Nagar, New Delhi-110025 کے پتے پر ایسے ارسال کریں کہ فارم جمع کرنے کی آخری تاریخ 16 /اگست2017 سے پہلے مذکورہ مسلم ایجوکیشن ٹرسٹ کو موصول ہوجائے۔
مسٹر جمال نے اس ضمن میں بتاتے ہوئے کہا کہ اس سلسلے کی مزید جانکاری یا انکوائری کیلئے metdelhi@gmail.com پر لکھیں۔ارشد جمال نے بتایاہے کہ ادارے کی طرف سے یہ بھی ہدایت ہے کہ آپ اپنی درخواست کا دو سیٹس روانہ کر نے کے علاوہ اس کاایک سیٹ اپنے پاس بھی محفوظ رکھیں۔انہوں نے بتا یا کہ فارم پر کرنے کے سلسلے میں مذکورہ تمام دستاویزات کے ساتھ مسکن سے بھی رابطہ کیا جا سکتا ہے۔